دینی مدارس کا تعلیمی سال اور طلباء کرام سے کچھ گزارشات

Afzal339

Advisor
Top Poster of a Month
Expert
Teacher
Writer
Joined
Apr 25, 2018
Messages
466
Likes
643
Points
272
#1

پاکستان، ہندوستان، بنگلہ دیش، افغانستان وغیرہ میں دینی مدارس کا تعلیمی سال شوال المکرم سے شروع ہوتا ہے اور رجب کے آخر یا شعبان کے شروع میں اختتام پذیر ہوتا ہے۔ماہ رواں شوال المکرم ہے اور تمام دینی مدارس میں نئے تعلیمی سال کا آغاز ہوچکا ہے۔
طلباء کرام دوردراز سے سفر کرکے اپنے اپنے مدارس میں پہنچ رہے ہیں۔ ان طلباء کرام میں جہاں قدیم طلبہ شامل ہیں، وہیں ایک بڑی تعداد ان جدید طلبہ کی ہیں جو حفظِ قرآن کریم کی تکمیل کے بعد درس نظامی پڑھنے کے لیے یا عصری تعلیم چھوڑ کر دینی مدارس کا رُخ کررہے ہیں۔
دینی مدارس جو اسلام کے قلعے ہیں ان کا وجود پوری انسانیت بالخصوص مسلم قوم اورمسلم معاشرے کے لیے سانس کی طرح لازم اورضروری ہے، کیوں کہ انہی دینی مدارس سے انسانی روح کا سامان مہیا ہوتا ہے، انہی دینی مدارس سے مسلم معاشرہ اپنے اسلامی تمدن، اسلامی معاشرت، اسلامی معیشت اور اسلامی ثقافت کے اصولوں پر پروان چڑھتا اور ترقی پاتا ہے۔
اس وقت جب کہ دینی مدارس کا نیا تعلیمی سال شروع ہے تو شمارے کے پلیٹ فارم سے چند ضروری گذارشات طلباء کرام سے کرنا ضروری سمجھتاہوں
پہلی گذارش
مدارس کے طلباء کرام کویہ بات ذہن نشین رکھنی چاہئے وہ ایک بھاری امانت کو لینے جارہے ہیں، لہذاطلباء کرام کو مکمل ذمہ داری کا مظاہرہ دکھانا چاہئے ا ور علم کا حصول صرف اس نیت کے ساتھ ہو کہ اسے حاصل کرکے اپنی اور امت کی اصلاح اور اس کی مدد سے دین کی خدمت مقصود ہو کسی پر علمی رعب جمانا یا دیگر دنیوی غرض مقصود نہ ہو اورجب وہ مدرسہ میں ہو تو وہاں کا لمحہ لمحہ ایک امانت کے طور پر استعمال کرنا ہے۔اس کے ساتھ مدارس کے قوانین کا احترام، اساتذہ کرام کا ادب، اسباق پر توجہ، متعلقہ کتابوں مطالعہ، اپنے رفقاء کے ساتھ نرمی والا برتاؤ اورمدرسہ کی دی ہوئی اجتماعی چیزوں کا دیانت کے ساتھ استعمال ان کی ذمہ داری بنتی ہے اور جو طالب علم ان امورکا اہتمام کرلے اسے ہی اللہ تعالی دینی علم کانوراور برکات عطاء فرماتاہے اور یہی طالب علم پوری انسانیت کے لیے ہدایت کا ذریعہ بنتا ہے اور جو طالب علم ان امور کی پابندی نہیں کرے گا توکوئی بعید نہیں کہ ذہین سے ذہین طالب علم بھی علم کے نور اوربرکات سے محروم ہوجائے
دوسری گذارش
جس ادارے میں تعلیم حاصل کررہے ہے،یعنی مادر علمی تو اس کے صاف صفائی کا ایسے خیال رکھیں جیسے اپنے گھر کا خیال رکھتے ہیں بدقسمتی سے اس معاملے میں چند اداروں کے طلباء کرام کو چھوڑ اکثرطلبا ء کرام سخت سستی کا مظاہرہ کرتے ہیں جو کہ انتہائی افسوس ناک ہے
تیسری گذارش
مدارس کے چھٹی اوقات جیسا کہ ظہر سے پہلے کا وقت تو اسے قیلولہ کی سنت کے لیے عصر سے مغرب کا وقت ذکر اذکار کے لیے اور عشاء سے فجر تک کے وقت میں تھوڑی دیر تہجد کے لیے ضرور مختص رکھیں اس سے باطنی اصلاح بہت بہتر ہوتی ہے اسی طرح جمعے کی چھٹی میں غیر درسی کتابوں (بالخصوص اکابرین کی آپ بیتیوں)کا مطالعہ کریں
اور ہر مہینے کے آخری جمعے میں چوبیس گھنٹے کی جماعت میں تشکیل کریں سہ ماہی اورشش ماہی امتحان کے بعدکی چھٹیوں اور عید الاضحی کی چھٹیوں وغیرہ میں امت کے صلحاء و علماء کرام سے ملاقات کریں کیوں ان حضرات کی ملاقاتوں سے اللہ تعالی کی یاد پیدا ہوتی ہے لہو ولعب اورفضول کے کھیل کود سے گریز کریں البتہ جسمانی فائدے والی کھیل کھیلی جاسکتی ہے بشرطیکہ اس سے پڑھائی کے اوقات اور شریعت کے کاموں میں حرج نہ ہو
چوتھی گذارش
نفلی نماز جیسا کہ اشراق، عصراورعشاء سے پہلے کی سنت غیر مؤکدہ، مغرب کے اوابین اور اگر وقت ملے تو چاشت کی نماز کا بھی اہتمام کریں
پانچویں گذارش
اپنے ہم مکتب یا کسی سے بھی اگر کسی مسئلے میں اختلاف ہوجائے تو اسے صرف اختلاف کی حد تک رکھیں۔اس اختلاف کو نفرت کی وجہ نہ بنائیں
چھٹی گذارش
وہ مسائل جن میں امت کے علماء کرام کا اختلاف ہے ان میں بحث مباحثوں سے گریز رکھیں
ساتویں گذارش
ہر قسم کی سیاسی یا مذہبی جماعتوں میں دوران طالب علمی شمولیت سے گریز کریں
آٹھویں گذارش
اگر سبق پڑھانے والے اساتذہ میں کوئی استاد علمی اعتبارسے کمزور ہے توپہلے پہل ان کی علمی کمزوری کو اپنی کم فہمی سے تعبیر کریں اور ان کی کمزوری کی شکایت کرنے سے گریز کریں الا یہ کہ سارے طلبا یا طلباکی اکثریت اس معاملے میں متفق ہوجائے کہ تو پھر بھی مہتمم صاحب سے اس طرح گذارش کی جائے کہ فلاں استاد کا سبق ہمیں ہماری کم فہمی کی وجہ سے سمجھ نہیں آتا،اگر ان کی جگہ کوئی اور ہمیں یہ سبق پڑھائے تو نوازش ہوگی
نویں گذارش
لباس اور حلیہ سنت کے مطابق رکھیں
دسویں گذارش
ایسا کوئی بھی کام نہ کریں جس سے مدارس اور اہل مدارس کی بدنامی ہو
تلک عشرۃ کاملۃ
 

Doctor

Team Leader
Most Valuable
Most Popular
Top Poster
Top Poster of a Month
Dynamic Brigade
Developer
Expert
Teacher
Writer
Joined
Apr 25, 2018
Messages
1,799
Likes
2,234
Points
662
Location
Rawalpindi
#2
جزاک اللّہ خیرا کثیرا
 
Top